منگل - 4 اکتوبر - 2022

اراکین اسمبلی ،چئرمین سینیٹ اور سپیکر قومی اسمبلی کی تنخوا ہوں کا بل سینیٹ سے مسترد-.

اسلام آباد-سٹاف رائٹر-اراکین اسمبلی،سپیکر اور سینیٹ چئرمین کی تنخواہوں میں اضافہ کا بل 16 اور29 کے فرق سے مسترد ۔اس موقع پر حکمران جماعت پاکستان تحریک انصاف (پی ٹی آئی) نے بل کی مخالفت کی اور سینیٹر اعظم سواتی نے کہا کہ تنخواہوں سے متعلق ریسرچ کی تھی تو معلوم ہوا کہ محتسب اعلیٰ کی تنخواہ 13 سے 14 لاکھ اور سیکریٹری کی تنخواہ ساڑھے تین لاکھ ہے۔

وفاقی وزیر اعظم سواتی کا کہنا تھا کہ مشکل معاشی صورت حال کے باوجود تنخواہیں کم نہیں ہوئیں، یہ ظلم کا نظام ہے اس پر بحث ہونی چاہیے اور ایسے بلز پہلے قومی اسمبلی میں پیش ہونے چاہیئں۔

انہوں نے کہا کہ آئین کے آرٹیکل 73 اور 74 کے مطابق مالیاتی بل پہلے قومی اسمبلی میں آنے چاہیئں۔

سینیٹر فیصل جاوید نے کہا کہ اس بل کی ٹائمنگ درست نہیں، ملک اس وقت معاشی مسائل کا شکار ہے، وزیر اعظم نے کفایت شعاری کا آغاز اپنی ذات سے کر لیا ہے اور اراکین پارلیمنٹ ابھی گزارہ کریں۔

وزیراعظم کی تنخواہ میں اضافے کی افواہوں پر وضاحت کرتے ہوئے ان کا کہنا تھا کہ جب معاشی حالات ٹھیک ہوں گے تو تنخواہیں بڑھائیں گے، وزیر اعظم نے اپنی تنخواہ میں اضافہ نہیں کیا بلکہ وزیر اعظم نے اپنے خرچے سے بنی گالہ کی سڑک ٹھیک کروائی۔

یہ بھی چیک کریں

کالعدم تحریک طالبان نے جنگ بندی ختم کردی

پشاور:کالعدم تحریک طالبان پاکستان کی جانب سے یکطرفہ طورپرگذشتہ ایک ماہ سے جاری جنگ بندی …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔