پیر - 3 اکتوبر - 2022

سعودی عرب:کرفیو کی خلاف ورزی کی تصاویر بنانے.اس کی خلاف ورزی کرنے پر اکسانے،اور اشاعت پر5 سال قید اور 30لاکھ ریال جرمانہ ہوگا.

ریاض: سعودی سرکاری وکیل نے متنبہ کیا ہے کہ جو بھی شخص نئے نافذ کردہ کرفیو آرڈر کی خلاف ورزی کی کوئی تصویر یا ویڈیو سوشل میڈیا پر پوسٹ کرتا ہے ، یا کرفیو توڑنے کے لئے کسی اور کو اکساتا ہے تو اسے قانونی چارہ جوئی کا سامنا کرنا پڑےگا۔عرب نیوز کے مطابق  ٹویٹر پر جاری ایک پیغام میں ، بیورو نے کہا ہے کہ انفارمیشن کرائم سے بچاؤ قانون کے آرٹیکل چھ کے تحت مجرموں پر الزام عائد کیا جائے گا ، جس میں پانچ سال تک قید اور تیس لاکھ تک جرمانہ ہوگا۔ سزا کا اطلاق خلاف ورزی کرنے والوں پر ہوگا لیکن مخبروں سے پوچھ گچھ نہیں کی جائے گی۔

 

یہ بھی چیک کریں

کرونا میں مبتلا امریکی صدر کو ہسپتال منتقل کردیاگیا

صدارتی انتخابات سے ایک ماہ قبل کرونا بیماری میں مبتلا امریکا کے صدر ڈونلڈ ٹرمپ …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔