اتوار - 2 اکتوبر - 2022

سعودی عرب : مساجد میں‌نماز کی ادائیگی معطل.نمازیں صرف مکہ مکرمہ اور مدینہ کی دو مقدس مساجد (حرمین )میں جاری رہیں گی۔

ریاض: سعودی عرب نے مکہ مکرمہ اور مدینہ منورہ کی دو مساجد کے علاوہ مملکت کی تمام مساجد میں اجتماعی نمازیں ملتوی کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔ منگل کے روز اعلان کردہ فیصلے میں مسلمانوں کی حوصلہ افزائی کی گئی ہے کہ وہ مساجد کے بجائے گھر میں نماز ادا کریں تاکہ کورونا وائرس پھیلنے سے بچ سکیں۔ ایس پی اے کے بارے میں ایک بیان میں کہا گیا ہے کہ یہ مذہبی طور پر مساجد میں تمام اجتماعی نمازوں کو معطل کرنے کی اجازت ہے ، جس میں ہفتہ وار نماز جمعہ بھی شامل ہے۔ اس کے مطابق ، مکہ مکرمہ اور مدینہ کی دو مقدس مساجد کو اس فیصلے سے استثنیٰ حاصل ہے۔ بیان میں کہا گیا ہے کہ ، "مسجد کے دروازے عارضی طور پر بند کردیئے جائیں گے لیکن اس کو نماز کی اذان سنانے کی اجازت ہوگی۔” اس نے یہ بھی کہا کہ اس کال میں ایک ترمیم کی گئی ہے جس میں عربی کال میں "نماز کیلئے آؤ” کے معمول کے فقرے کی جگہ "گھر میں نماز پڑھیں” کی جگہ دی گئی ہے۔ نئے جملے کا ترجمہ "آپ جہاں ہوں نماز پڑھو” بھی کیا جاسکتا ہے۔ بیان میں کہا گیا ہے کہ جمعہ کے دن دوپہر کے وقت ایک خصوصی اجتماعی نماز اب گھر بیٹھے مسلمان ادا کرسکتے ہیں۔

واضح رہے کہ  متحدہ عرب امارات میں مساجد میں نماز جمعہ سمیت تمام نمازوں کی ادائیگی پر ایک مہینہ کیلئے پابندی  گزشتہ روز عائد کردی تھی اور اذان میں نئے الفاظ بھی شامل کردئے گئے ہیں۔

یہ بھی چیک کریں

گندم و چینی کی دستیابی اور قیمتوں کی خود نگرانی کر رہا ہوں، وزیراعظم

گندم و چینی کی دستیابی اور قیمتوں کی خود نگرانی کر رہا ہوں، وزیراعظم

اسلام آباد(یواین پی)وزیراعظم عمران خان نے کہا ہے کہ اس وقت تمام معاشی اعشاریے مثبت …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔