اتوار - 2 اکتوبر - 2022

فرینکفرٹ .تارکین وطن پاکستانیوں کو جرمنی سے بیدخل کرنے کی جرمنی کے محکمہ داخلہ کی مہم تیز ۔جرمنی سے منصور احمد کی رپورٹ

فرینکفرٹ اور فرینکفرٹ کے گرد نواح شہروں سے چند دنوں سے پولیس نے پناہ گزینوں کی رھاش گاھوں سے کثیر تعداد میں پاکستانیوں کو ڈیپورٹ کرنے کی غرض سے گرفتار کرکے
حراستی مرکز میں منتقل کردیا ہے۔
جس سے پناہ کزین پاکستانیوں میں شدید بےچینی کی لہر دوڑ گئی ھے ۔
گرفتار ھونے والے نوجوانوں کا زیادہ تر تعلق ضلع گجرات اور منڈی بہاؤالدین سے بتایا جاتا ھے۔
یاد رھے یہ لوگ اپنی معاشی مجبوریوں کی وجہ سے یہاں مقیم ھے ۔ پاکستانی وزارت داخلہ ان کے شناختی کاغذات براہ راست جرمنی کو مہیا کررھی ھے ۔
ان میں سے اکثریت غیرقانونی طور پر جرمنی میں داخل ھوئے
اور جرمنی کے سیاسی پناہ گزین والے قانون سے فائدہ اٹھاتے ھے اور یہاں رھنے کا جواز مل جاتا ھے۔ چونکہ سیاسی پناہ انسانی ھمدردی کی بنیاد پر ھوتی ھے۔ اور سیاسی پناہ لینے افراد کو عدالت میں موقع دیا جاتا ھے کہ اپ کو کیا مسائل تھے اور یہاں مستقبل رھنے کا حق دے۔ اکثریت خود خو حق دار ثابت نہیں کرسکتی تو سیاسی پناہ کی درخواست رد کر دی جاتی
اپیل کا حق بھی دیا جاتا ھے
جرمنی جو کہ ایک فلاحی آور انسان دوست ریاست ھے ۔اسی ھمدردی کی بنیاد پر قانون میں مکمل گنجائش رکھی ھے کہ درخواست دھندہ خود کو حقدار ثابت کرسکے۔
چونکہ ھمارے وطن عزیز میں ایسا کوئی مسلئہ نھیں ھے تو کیس رد ھوجاتے ھے
صرف اور صرف معاشی ناھمواریوں کا شکار لوگ بہتر مستقبل کے خواب سجائے یورپ کا رخ اختیار کرتے ھے ۔ ڈیپورٹ کئے جانے کے خطرے میں مبتلاء افردا کا کہنا ہے کہ افسوس صد افسوس حکومت پاکستان ظالمانہ معاہدہ کی بدولت ان لوگوں کو ڈیپورٹ کرنے کے لئے شناختی کاغذات مہیا کررھی ھے۔یاد رہے کہ گزشتہ سال جرمنی سے غیر قانونی تارکین وطن کو بے دخل کرنے کا معاملہ زیر بحث رہا۔

یہ بھی چیک کریں

ریاض : 28 مئی جوہری پروگرام کا آغاز اور تکمیل قوم قیادت اور اداروں کی یکجہتی کا مظہر تھا،ملک راشد پرویز اعوان

ریاض :  28 مئی جوہری پروگرام کا آغاز اور تکمیل قوم قیادت اور اداروں کی یکجہتی کا مظہر تھا،ملک راشد پرویز اعوان

ریاض ( ناظم علی عطاری ) پاکستان مسلم لیگ ن سعودی عرب ریاض ریجن کے …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔