پیر - 3 اکتوبر - 2022

لندن: نواز شریف کے ذاتی معالج پر حملہ،آہنی راڈ اور مکے بھی مارے گئے

میڈیا رپورٹس:نواز شریف کے ذاتی معالج ڈاکٹر عدنا ن پر لندن میں حملہ

روزنامہ جنگ نے ذرائع کے حوالے سے لکھا ہے کہ

ذرائع کہنا ہے کہ پاک لین میں 2 نقاب پوشوں نے ڈاکٹر عدنان پر راڈ سے حملہ کیا جس سے وہ زخمی ہوگئے، انہیں اسپتال منتقل کر دیا گیا جہاں ان کو طبی امداد دی جارہی ہے۔

ذرائع کے مطابق دھاتی راڈ سے نقاب پوش افراد کے حملے میں ڈاکٹر عدنان کے سر، چہرے اور سینے پر چوٹیں آئی ہیں۔

پولیس کا کہنا ہے کہ انہیں حملے سے متعلق اطلاع ملی ہے۔

 شریف فیملی کے ترجمان کے مطابق شریف فیملی نے لندن میں میاں محمد نواز شریف کے زاتی معالج پر حملے کو قابل مذمت قرار دیا ہے۔

ترجمان شریف فیملی کا کہنا ہے کہ ڈاکٹرعدنان کو دھمکی آمیز کالیں موصول ہوئی تھیں، اس قسم کے حملوں کا جواب قانونی دائرے میں رہ کر دینےکا حق رکھتےہیں۔

ذرائع کے مطابق ڈاکٹر عدنان کو دھمکی آمیز کالز کےثبوت پولیس کو دے دیے گئے ہیں۔

واضح رہے کہ سابق وزیراعظم نواز شریف 19 نومبر 2019 سے علاج کی غرض سے اپنے زاتی معالج ڈاکٹر عدنان کے ہمراہ لندن گئے تھے، نواز شریف کی صحت اور لندن میں جاری علاج سے متعلق ان کے ذاتی معالج ڈاکٹر عدنان ہی اپڈیٹ کرتے ہیں۔

یہ بھی چیک کریں

کالعدم تحریک طالبان نے جنگ بندی ختم کردی

پشاور:کالعدم تحریک طالبان پاکستان کی جانب سے یکطرفہ طورپرگذشتہ ایک ماہ سے جاری جنگ بندی …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔