جمعرات - 2 فروری - 2023

پاکستان میں کورونا مریض ایک لاکھ 81 ہزار سے تجاوز

ملک میں کورونا وبا مزید پھیلنے کے سبب 24 گھنٹوں میں 89 افراد جاں بحق ہو گئے جس کے بعد اموات کی مجموعی تعداد 3 ہزار590 تک پہنچ گئی جبکہ کورونا مریضوں کی تعدادایک لاکھ 81 ہزار88  سے تجاوزکرگئی جبکہ کورونا سے متاثر71 ہزار458 مریض صحت یاب ہوئے ہیں۔

گزشتہ 24 گھنٹوں کے دوران ملک میں 4,471 نئے کیسز سامنے آئے، نیشنل کمانڈ اینڈ آپریشن سینٹرکی جانب سے جاری اعدادو شمارکے مطابق مہلک وائرس کو وِڈ نائنٹین سے پاکستان بھر میں 181,088 افراد متاثر ہو چکے ہیں، جبکہ اموات کی تعداد 3,590 ہو گئی ہے۔

پاکستان میں آبادی کے لحاظ سے کرونا وائرس سے متعلق اعداد و شمار کچھ یوں ہیں کہ گزشتہ چند دنوں میں 10 لاکھ آبادی میں اموات کی شرح 15 سے بھی بڑھ کر 16 فی صد ہو چکی ہے جبکہ 10 لاکھ آبادی میں کیسز کی تعداد بھی بڑھ کر 820 ہو گئی۔ کرونا وائرس کی تشخیص کے لیے کیے جانے والے ٹیسٹوں کی شرح 10 لاکھ آبادی میں 4,993 ہے۔

ملک کے مختلف شہروں میں اس وقت کرونا کے زیرعلاج مریضوں کی تعداد 1 لاکھ 6 ہزار 40 ہے جبکہ اب تک 71,458 مریض بیماری سے صحت یاب ہو چکے ہیں۔

کمانڈ سینٹرکا کہنا ہے کہ سب زیادہ اموات پنجاب میں ہوئی ہیں جن کی تعداد 1,435 ہے، اس کے بعد سندھ میں 1,089 اموات، خیبر پختونخوا میں 821 اموات، بلوچستان میں 102، اسلام آباد میں 101، گلگت بلتستان میں 22 اموات جبکہ آزاد کشمیر میں 20 اموات ریکارڈ ہوئی ہیں۔

سندھ میں کرونا کیسز کی تعداد سب سے زیادہ 69,628 ہو گئی، پنجاب میں 66,943 کرونا کیسز رپورٹ ہو چکے ہیں، خیبر پختونخوا میں کیسز کی تعداد 21,997، اسلام آباد میں 10,912 ہو گئی، بلوچستان میں 9,475، گلگت بلتستان میں 1,288 کرونا کیسز رپورٹ ہوئے، آزاد کشمیر میں کیسز کی تعداد 845 ہے۔

گزشتہ 24 گھنٹوں کے دوران ملک میں 30 ہزار 520 کرونا ٹیسٹ کیے گئے، این سی او سی کے مطابق ملک میں اب تک کرونا کے 11 لاکھ 2 ہزار 162 ٹیسٹ کیے جا چکے ہیں۔

سندھ میں 36,278 مریض صحت یاب ہوئے ہیں، پنجاب میں 19,100 مریض، خیبر پختونخوا میں 6,536 مریض، اسلام آباد میں 4,681، بلوچستان میں 3,650 مریض، گلگلت بلتستان میں 865 مریض جبکہ آزاد جموں و کشمیر میں 348 مریض صحت یاب ہو چکے ہیں۔



Source link

یہ بھی چیک کریں

کالعدم تحریک طالبان نے جنگ بندی ختم کردی

پشاور:کالعدم تحریک طالبان پاکستان کی جانب سے یکطرفہ طورپرگذشتہ ایک ماہ سے جاری جنگ بندی …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔