جمعرات - 9 دسمبر - 2021

عظمیٰ بخاری اور فیاض الحسن چوہان کے درمیان نوک جھونک

لاہور:وزیر جیل خانہ جات پنجاب فیاض الحسن چوہان کا کہنا ہے کہ اگر عظمیٰ بخاری اگر جیل بھیجیں تو جانے کو تیار ہوں۔

ٹوئٹر پر ایک وڈیو وائرل ہوئی ہے جس میں مسلم لیگ (ن) پنجاب کی سیکریٹری اطلاعات عظمٰی بخاری اور وزیر جیل خانہ جات پنجاب فیاض الحسن کے درمیان میڈیا کے سامنے زبردست جملے بازی ہورہی ہے۔

پنجاب اسمبلی کے باہر وزیر جیل خانہ جات پنجاب فیاض الحسن چوہان اور رہنما (ن) لیگ عظمی بخاری کے درمیان دلچسپ نوک جھوک دیکھنے میں آئی، اس موقع پر عظمیٰ بخاری کے ہمراہ لیگی رہنما حناپرویز بٹ بھی موجود تھیں۔

میڈیا کے سامنے بات کرتے ہوئے فیاض الحسن چوہان کا کہنا تھا کہ ہم مشترکہ پریس کانفرنس کریں گے جس میں ہم اپنا موقف پیش کریں گے اور مسلم لیگ (ن) اپنا موقف بیان کرے گی۔

جس پر عطمٰی بخاری نے فیاض الحسن چوہان کو طنز کا نشانہ بناتے ہوئے کہتی ہیں کہ وہ تم وزارت کا قلمدان تو لاؤ، جس پر فیاض الحسن چوہان بالواسطہ کہتے ہیں کہ یہ ایک وزیر سے کہتی ہیں کہ قلمدان لاؤ، جس پر کچھ نہیں کہا جاسکتا۔

فیاض الحسن چوہان ابھی گفتگو کرر ہی رہے تھے کہ اس دوران عظمیٰ بخاری نے کہا کہ مجھے اس پر افسوس ہوتا ہے لیکن اسے خود پرافسوس نہیں ہوتا، میں تمہیں فوٹیج نہیں دوں گی۔

رہنما (ن) لیگ عظمیٰ بخاری نے کہا کہ چوہان صاحب، جیل میں اپنے لیے جیل میں سیل بنالیں جس پر فیاض الحسن چوہان نے کہا کہ عظمیٰ بخاری اگر جیل بھیجیں تو جیل جانے کو تیار ہوں۔



Source link

یہ بھی چیک کریں

مودی ہماری امن کی خواہش کو کمزوری سمجھ بیٹھا ہے۔ وزیر اعظم

اسلام آباد: وزیر اعظم عمران خان نے کہا کہ حکومت سنبھالنے کیلئے قیام امن کیلئے …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے